5 جنوری 2022

مارکیٹ تجزیہ

Apple نے 3 ٹریلین کے مارکیٹ کیپ کو چھو لیا ہے

3 جنوری، 2022 کو، جب دنیا نئی نئی ایک نئے سال میں داخل ہو رہی تھی، Apple کمپنی نیا ریکارڈ توڑنے میں مصروف تھی یعنی 3 ٹریلین مارکیٹ ویلیو تک پہنچنے والی پہلی امریکی بننے کا ریکارڈ۔

اس ٹیکنالوجی کے سلطان کے شیئرز پیر کے دن $182.88 تک جا پہنچے جس سے مختصر وقت کیلئے 3 ٹریلین کا سنگ میل عبور ہوا، اس کے بعد شیئرز سال کے پہلے تجارتی دن کو $182.01 پر بند ہوئے۔ اگرچہ یہ بہت مختصر وقت کیلئے تھا تاہم اس بات سے انکار نہیں کیا جا سکتا کہ Apple کے پاس اب ٹریلین ڈالر کے سنگ میل کو عبور کرنے والی پہلی کمپنی ہونے کا اعزاز ہے۔

iPhone کی تخلیق کار کمپنی 2018 میں 1 ٹریلین ڈالر تک پہنچی اور پھر دو سال بعد، اگست 2020 میں 2 ٹریلین ڈالر کا نشان چھوا۔ اب، محض 16 ماہ میں، Apple نے نیا ریکارڈ حاصل کیا ہے یعنی گزشتہ سال کے آغاز سے اب تک شیئرز میں 40% سے زائد اضافہ۔

2022 میں بُلش کارکردگی؟

کئی سرمایہ کاران کے پورٹ فولیو میں بنیادی فصل کی حیثیت رکھنے والے Apple اسٹاک کی کارکردگی سے متعلق تجزیہ کاران امید پرور ہیں اور موجودہ سہہ ماہی کیلئے 118 بلین ڈالر کی پیشنگوئی جبکہ مجموعی سالانہ منافع میں 574 بلین ڈالر کی پیشنگوئی کر رہے ہیں۔ آنے والی نئی پروڈکٹس کے سلسلے سے منافع ممکنہ طور پر متوقع ہے جیسے کہہ نئے Macs کی سیریز، نیا iPad Pro، ایک ری ڈیزائن کردہ MacBook Air اور AR/VR ہیڈ سیٹ جس کا سب کو بے حد انتظار ہے۔

لگتا ہے کہ Wedbush Securities کے تجزیہ کار Dan Ives اور Morgan Stanley کی تجزیہ کار Katy Huberty کی $200 قیمت کے ہدف والی پیشنگوئی پوری ہو سکتی ہے۔ 

نیا Covid-19 ویرئنٹ اور بڑھتے ہوئے کیسز اب بھی سپلائی چین میں خلل کا باعث بن سکتے ہیں جیسا کہ چپ کی قلت میں ہوا تھا جس کا سامنا ٹیک کمپنی کو گزشتہ سہہ ماہی میں کرنا پڑا۔ اور ہمیں ابھی یہ بھی ملحوظ خاطر رکھنا ہے کہ Apple کی نئی پروڈکٹس اور ممکنہ AR/VR ہیڈ سیٹ، جو کہ بلاشبہ Meta کے Oculus کو ایک کال آؤٹ ہے، کے تئیں لوگوں کی کیا رائے ہوگی۔

بڑھتا ہوا مقابلہ

مقابلے کی بات کی جائے تو دیگر کمپنیاں بھی Apple سے 3 ٹریلین ڈالر کا تاج لینے کیلئے مکمل طور پر تیار معلوم ہو رہی ہیں۔ Microsoft اور Google بالترتیب 2.5 اور 2 ٹریلین ڈالر کے ساتھ سیڑھیاں چڑھ رہے ہیں اور کون جانتا ہے کہ Amazon، Meta Platforms اور ایک وقت میں چھپے رستم مانے جانے والے Tesla نے آگے کیا کیا جوہر دکھانے ہیں۔

جبکہ یہ بڑے نام اس تخت پر بیٹھنے کیلئے کوشاں ہیں، کیا Apple کو فروخت کر کے پورٹ فولیو متنوع بنانے کا وقت آگیا ہے یا پھر اسی کو ہولڈ کرنا چاہیے؟ آپ کی حکمت عملی جو بھی ہو، بس کوئی بھی فیصلہ کرنے سے پہلے اپنا تجزیہ کرنا یقینی بنائیں۔

متعلقہ مضامین